Discy Latest Questions

  1. جواب : ڈاکٹر صاحب دھوتی اور بنیان پہنے کرسی پر اکڑوں بیٹھے تھے اور اپنے گھٹنوں پر پرچیاں رکھے نسخے لکھ لکھ کر مریضوں کو دے رہے تھے۔ اس کہانی کے خلاصے اور دیگر سوالات کے جوابات کے لیے یہاں کلک کریں۔

    • 0
  1. جواب : جوں ہی ڈاکٹر کو گاؤں کے نمبر دار نے اطلاع دی مصنف ڈپٹی کمشنر ہیں تو ڈاکٹر صاحب بھاگ کر اپنے کوارٹر میں گئے اور کچھ دیر بعد بنیان کے اوپر شیروانی پہنے اور ہاتھ میں اسٹیتھو سکوپ لے کر برآمد ہوئے۔ اس کہانی کے خلاصے اور دیگر سوالات کے جوابات کے لیے یہاں کلک کریں۔

    • 0
  1. جواب : مصنف کو گمان ہوا کہ اسپتال کے انڈوروارڈ میں ڈاکٹر کی بھینس باندھی جاتی ہے کیونکہ مصنف کو وہاں ایک کونے میں تازہ گوبر کے نشان نظر آئے ، جنہیں ابھی ابھی صاف کیا گیا ہو۔ اس کہانی کے خلاصے اور دیگر سوالات کے جوابات کے لیے یہاں کلک کریں۔

    • 0
  1. جواب : مصنف کو گاؤں میں جو اصطبل نظر آیا، وہ دراصل وہاں کا اسپتال تھا۔ اس کہانی کے خلاصے اور دیگر سوالات کے جوابات کے لیے یہاں کلک کریں۔

    • 0
  1. جواب : مصنف نے دیہات میں گھومنے کے شوق کی یہ وجہ بیان کی ہے کہ اس طرح ایک انسان کی آنکھ ان نظاروں کا مشاہدہ کرتی ہے جو ڈپٹی کمشنر کی آنکھ کو نصیب نہیں ہوتا۔ اس کہانی کے خلاصے اور دیگر سوالات کے جوابات کے لیے یہاں کلک کریں۔

    • 0