Discy Latest Questions

  1. جواب : اس نظم میں شاعر حضرت حمزہ کی بہادری بیان کرتے ہوئے نظم کا آغاز کرتے ہیں اور پھر غزوہ احد کا منظر پیش کرتے ہیں۔ غزوہ احد میں آپﷺ حضرت حمزہ کو مضطرب اور مطمئن دل کے ساتھ میدانِ جنگ کی جانب رخصت کرتے ہوئے ان کی پیشانی چومتے ہیں اور فرماتے ہیں کہ میں رب کی رضا میں راضی ہوں۔ پھر حضرت حمزہ میدانِ جRead more

    • 0
  1. جواب : حضور پاک ﷺ نے فرمایا کہ آپ میدانِ جنگ میں جائیں اور اسلام کی نصرت کیجیے ، جو اللہ کی مرضی ہے میں اس پر راضی ہوں اور پھر حضور پاک نے حضرت حمزک کی پیشانی کو چوما۔

    • 0
  1. جواب : حضرت حمزہ کو میدانِ جنگ میں جاتے دیکھ کر آپﷺ کے چہرے پر ایک رقت نمایاں تھی، آپ کی نگاہیں مضطرب تھیں ، اور چہرے ہر ہلکا سا تبسم تھا اور آپﷺ اللہ تعالیٰ کی مرضی پر مطمئن تھے۔

    • 0