سوال: شوریدہ کاشمیری کی حالات زندگی اور ادبی خدمات مختصراً بیان کیجیے۔

سوال: شوریدہ کاشمیری کی حالات زندگی اور ادبی خدمات مختصراً بیان کیجیے۔

1 Answer

  1. جواب: آپ کا اصلی نام غلام محمد ملک اور شوریدہ تخلص تھا۔شوریدہ کشمیری قلمی نام تھا۔ 18 مارچ 1924ء کو تحصیل شوپیاں کے گاؤں پنجورہ میں پیدا ہوئے۔ والد کا نام محمد عبداللہ ملک تھا جو زیادہ پڑھے لکھے نہیں تھے لیکن اپنے بیٹے کی تعلیم کا انہیں بے حد شوق تھا۔

    شوریدہ کاشمیری نے آٹھویں جماعت تک تعلیم حاصل کی اور بعد میں سرینگر کے اسلامیہ ہائی اسکول میں داخلہ لیا اور یہیں سے اچھے نمبرات کے ساتھ میٹرک کا امتحان پاس کیا۔ ایس پی کالج سرینگر سے بی اے کی ڈگری حاصل کی اور محکمہ مال میں ملازم ہوئے۔ اس کے بعد محکمہ تعلیم میں استاد کی حیثیت سے ملازمت اختیار کی۔اس دوران ہی علی گڑھ مسلم یونیورسٹی سے پرائیویٹ امیدواروں کی حیثیت سے ایم اے کا امتحان پاس کیا۔ بعد میں گورنمنٹ ڈگری کالج اننت ناگ میں اردو کے لیکچر مقرر ہوئے۔ کالج سطح پر برسوں درس تدریس کے فرائض انجام دینے کے بعد سرکاری نوکری سے سبکدوش ہوئے۔ 1990 میں نئی بستی اسلام آباد میں آپ کا انتقال ہوا۔

    شوریدہ کاشمیری کو بچپن سے ہی شروع شاعری کا شوق تھا کالج میں داخلے کے بعد انہوں نے خاص طور پر اس کی طرف اپنی توجہ مبذول کی۔ آپ کے دو شعری مجموعے ”جوش جنوں“ اور ”جذبہ دوری“ شائع ہو چکے ہیں۔ ان دونوں مضمونوں میں غزلیات کے علاوہ نظمیں اور رباعیات وغیرہ بھی ہیں۔

    • 0