سوال: شاعر دست سوال لے کے کہاں جاتا ہے؟

سوال: شاعر دست سوال لے کے کہاں جاتا ہے؟

1 Answer

  1. جواب: شاعر دست سوال لے کے محبوب کے در پر جاتا ہے اور وہاں سے خالی ہاتھ واپس آ جاتا ہے اور کہتا ہے کہ میں بھی کتنا ناداں ہوں ہاتھ پھیلائے وہ بھی کس کے در پر۔ خدا کے حضور میں پھیلائے ہوتے تو بگڑی بن جاتی۔

    • 0